تحریک انصاف کے جلسے میں کتنے لوگ

پاکستان تحریک انصاف نے لاہور مینار پاکستان میں ایک طویل عرصے کے بعد جسلہ کیا ہے ۔ جلسے سے خطاب میں عمران خان نے ‘نیا پاکستان’ بنانے کے لیے گیارہ نکات کا اعلان کیا ۔ ا انہوں نے کہا ہے کہ بدعنوانی کا خاتمہ، تعلیم، صحت، ملازمتوں کے مواقع فراہم کرنا اُن کی اہم ترجیحات ہیں۔

خطاب میں عمران خان نے کہا کہ وہ حکومت میں آئے تو جنوبی پنجاب کو علیحدہ صوبہ بنائیں گے ۔ عمران خان نے کہا کہ ’جب میں نے آپ سے پیسہ مانگا آپ نے دل کھول کر دیا چاہے وہ ہسپتال کے لیے ہو یا یونیورسٹی کے لیے ہو۔ آپ نے مجھے کبھی مایوس نہیں کیا ۔‘

عمران خان نے گیارہ نکات کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ وہ ملک میں سرکاری تعیلمی اداروں کی حالتِ زار کو بہتر کریں گے ۔ انھوں نے کہا کہ اگر اُن کی جماعت حکومت آئی تو وہ فیڈریشن کو مضبوط کریں گے اور قبائلی عوام کو بھی اُن کا حق دیں گے ۔

تحریک انصاف کے جلسے کو الیکٹرانک میڈیا میں بہت زیادہ کوریج دی گئی اور اس کیلئے نجی چینلز پر کروڑوں روپے کے اشتہارات بھی چلائے گئے ۔ تاہم سوشل میڈیا پر صارفین کی ایک بڑی تعداد نے اس جلسے اور شرکا کی تعداد پر دلچسپ تبصرے کیے ۔

بعض صارفین نے لکھا کہ جلسے میں شرکا کی تعداد تو چالیس ہزار کے لگ بھگ تھی مگر اے آر وائے نے ستر ہزار بتائی جبکہ پی ٹی آئی سے معاہدے کے بعد جیو نیوز نے بھی تعداد بڑھ چڑھ کر بتائی ۔ سوشل میڈیا پر جلسے سے زیادہ جیو نیوز کی کوریج زیربحث رہی ۔

متعلقہ مضامین