مظلوم خدیجہ کیس کی سماعت

لاہور میں وکیل کے بیٹے کے ہاتھوں ۲۳ چھریوں کے وار سہنے والی خدیجہ کے از خود نوٹس کیس کی سماعت سپریم کورٹ میں چیف جسٹس کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے کی ۔

خدیجہ کے وکیل نے بتایا کہ لاہور ہائیکورٹ کی جانب سے ملزم شاہ حسین کو بری کرنے کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ میں اپیل دائر کر دی ہے ۔ چیف جسٹس نے کہا کہ اس اپیل کی سماعت جسٹس آصف کھوسہ کی سربراہی میں بنچ کرے گا ۔

‏خدیجہ نے عدالت کے روسٹرم پر آ کر اپنا دکھ بیان کیا اور کہا کہ اب میری کردار کشی کی گئی مجھے انصاف چاہئے ۔ بار کے نمائندوں اور ملزم کے وکیل نے شور مچایا تو چیف جسٹس نے کہا کہ بار کی ہمت کیسے ہوئی کہ وہ سو موٹو کے خلاف قرارداد پاس کریں، اگر کسی وکیل کی بیٹی کے ساتھ یہ سب ہوا ہوتا تو تب بھی آپ لوگ ایسا کرتے؟ ۔

ملزم شاہ حسین کے باپ لاہور کے وکیل ہیں اور اثر و رسوخ رکھتے ہیں ۔

مزید دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے