پولیس تھانے پر حملہ مگر

گلگت بلتستان کے ضلع دیامر کے حکام کا دعوی ہے کہ دہشتگردوں نے اپنےساتھی چھڑانے کیلئے پولیس تھانے پر حملہ کیا جس میں ایک دہشت گرد ہلاک ہو گیا تاہم مقامی لوگوں نے اس کی تصدیق نہیں کی ۔ کئی افرد نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر الزام عائد کیا ہے کہ مقامی انتظامیہ مذہبی لوگوں کو ڈرانے کیلئے یہ سب کر رہی ہے ۔

مقامی حکام کے مطابق ضلع دیامر میں دہشتگردوں نے داریل تھانے پر حملہ کیا اور گزشتہ روز پکڑے گئے دہشتگردوں کو چھڑا لے گئے۔دہشت گردوں اور پولیس میں فائرنگ کے تبادلے میں ایک دہشت گرد بھی مارا گیا جس کی شناخت شفیق الرحمان کے نام سے ہوئی ہے۔ دہشتگردوں نے داریل جانے والی شاہراہ پر قبضہ کرلیا ہے اور آنے جانے والے ہر شخص پر فائرنگ کررہے ہیں۔دہشتگردوں نے داریل روڈ پر پتھر گرا کر ہر قسم کے ٹریفک کے لئے بند کردیا۔
حکام کا یہ بھی دعوی ہے کہ گزشتہ رات پولیس نے مولوی شہزادہ خان کے گھر پر چھاپہ مارا تھا جہاں دہشت گردوں نے فائرنگ کرکے پولیس اہلکار عارف کو شہید کردیا تھا۔پولیس نے مولوی شہزادہ خان کے گھر سے 2 دہشتگردوں کو گرفتار کرکے داریل تھانہ منتقل کردیا تھا۔

متعلقہ مضامین