پانی کی قلت کا خدشہ برقرار

ملک میں پانی کی قلت کا خدشہ برقرار ہے ۔ آبپاشی کےلئے صوبوں کے درمیان پانی کی تقسیم کے حوالے سے ارسا ایڈوائزری کمیٹی کا اجلاس کل ہو گا ۔

ارسا ذرائع کے مطابق اجلاس میں ارسا اتھارٹی کے علاوہ واپڈا سمیت دیگر متعلقہ محکموں کے حکام شرکت کریں گے، اجلاس میں صوبوں کے درمیان آبپاشی کےلئے۔پانی کی تقسیم کی حتمی منظوری دی جائے گی ۔

ارسا ذرائع کے مطابق آئندہ سیزن کے دوران پانی کی شدید قلت کا خدشہ ہے جو چالیس فیصد تک ہو سکتا ہے، جبکہ پانی کی قلت کا سارا نقصان سندھ اور پنجاب کو برداشت کرنا ہوگا، بلوچستا ن اور خیبر پختونخواہ پانی کی کٹوتی سے مستثنیٰ رہیں گے، ذرائع کے مطابق اگر دسمبر اور جنوری میں بارشیں معمول سے کم رہیں تو بحرانی کیفیت جنم لے سکتی ہے، جبکہ اس وقت آبی ذخائر میں صرف چھ اعشاریہ تین ملین ایکڑ فٹ پانی موجود ہے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے