معاف کر سکنے والے صدر نے رائے دیدی

صدر مملکت عارف علوی نے سانحہ ساہیوال پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ واقعے میں ملوث ظالم قاتلوں کو قرار واقعی سزا دی جائے گی ۔ اس بیان کے بعد یہ سوال اٹھایا جا رہا ہے کہ اس طرح کی بات کرنے کے بعد اگر ان کے پاس انہی ملزمان کی سزا کے خلاف رحم کی اپیل آئے گی تو وہ کیا کریں گے؟

صدر مملکت نے سانحہ ساہیوال پر اظہار افسوس کرتے ہوئے ٹوئٹ کیا ہے کہ ساہیوال کا واقعہ بہت تکلیف دہ ہے۔ جن بچوں کے سامنے ان کے والدین کو شہید کردیا گیا ہو، ان کے ذہنوں پر کتنے مضراثرات مرتب ہوں گے، اس کا میں اندازہ بھی نہیں لگا سکتا ہوں۔ حکومت انشااللہ ان کا خیال تو رکھے گی مگر والدین کا کوئی نعم البدل نہیں۔ انہوں نے لکھا کہ ظالم قاتلوں کو قرار واقعی سزا دی جائے گی۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button