پاکستان کے ایٹمی ہتھیار خطرے میں

اسلام آباد میں مولویوں کے دھرنے کی وجہ سے پورے ملک کو یرغمال بنانے کے بعد افغانستان کے اخبارات نے بھی پاکستان کی حالت پر سوال اٹھانے شروع کیے ہیں۔ افغانستان ٹائمز نے اپنے اداریے میں لکھا ہے کہ نومبر کے پورے مہینے پاکستان کے دارالحکومت کو شدت پسندوں اور دہشت گردوں نے مولوی خادم رضوی کی سربراہی میں یرغمال بنایا۔ جس کی وجہ سے ریاست کے تمام کاروبار ٹھپ ہوکر رہ گئے۔ اداریے میں لکھا گیاہے کہ پاکستان کی ریاست کی پوری مشینری اٹھارہ سو شدت پسندوں کو منتشر کرنے میں ناکام ہوگئی اور یہ خطے کے مستقبل کیلئے کوئی اچھی علامت نہیں۔ اخبار نے اپنے اداریے میں پوری صورتحال کا تفصیلی تجزیہ کرتے ہوئے امریکا میں پاکستان کے سابق سفیر حسین حقانی اور وزیرداخلہ احسن اقبال کے بیانات کا بھی حوالہ دیاہے۔ اخبار نے لکھاہے کہ افغانستان میں موجود امریکا اور اتحادی افواج کے ساتھ نیٹو کو بھی اس معاملے پر کارروائی کرتے ہوئے پاکستان کے ایٹمی ہتھیاروں کی حفاظت کیلئے اقدام کرنا چاہیے بصورت دیگر پاکستان، انڈیا اور افغانستان میں بسنے والے کروڑوں انسان زندگی اور موت کی دہلیز پر کھڑے ہوںگے۔

متعلقہ مضامین