شاداب آؤٹ، یاسر شاہ ان

پاکستان کرکٹ بورڈ نے اعلان کیا ہے کہ عالمی کرکٹ کپ سے قبل پاکستان کرکٹ ٹیم کے نوجوان لیگ سپنر شاداب خان کے خون میں ایک وائرس کی موجودگی کے انکشاف کے بعد وہ انگلینڈ کے خلاف ون ڈے سیریز میں حصہ نہیں لے سکیں گے۔

شاداب کی جگہ سپنر یاسر شاہ کو ٹیم میں شامل کیا گیا ہے ۔

وزیراعظم عمران خان نے شاداب خان کو ورلڈ کپ میں پاکستان کے لیے ٹرمپ کارڈ قرار دیا تھا۔

 قومی کرکٹ ٹیم کے چیف سلیکٹر انضمام الحق نے لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ شاداب خان کے بلڈ ٹیسٹ میں وائرس کی نشاندہی ہوئی ہے جس کے پیش نظر ڈاکٹروں نے انہیں چار ہفتے آرام کا مشورہ دیا ہے اور وہ دورہ انگلینڈ میں ٹیم کا حصہ نہیں ہوں گے۔

انھوں نے امید ظاہر کی کہ شاداب خان ورلڈ کپ سے قبل کرکٹ کھیلنے کے قابل ہو جائیں گے۔ 

انضمام الحق کے مطابق شاداب خان کو بیماری کے علاج کے لیے کم ازکم 4 ہفتے درکار ہوں گے۔ شاداب خان کی ورلڈ کپ سے پہلے ریکوری کے لیے پاکستان کرکٹ بورڈ انگلینڈ میں ان کا علاج ماہر ڈاکٹروں سے کروائیں گے۔

واضح رہے کہ پاکستان5 مئی سے 19 مئی کے درمیان انگلینڈ کے خلاف میچزکھیلے گا۔ انگلینڈ کے خلاف سیریز کے لیے پہلے سے اضافی کھلاڑیوں محمد عامر اور آصف علی کے ناموں کا اعلان کیا جا چکا ہے۔

کرکٹ کی عالمی تنظیم آئی سی سی کے قواعد کے مطابق کوئی بھی ٹیم 23 مئی تک اپنے ابتدائی سکواڈ میں تبدیلی کر سکتا ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے