معیشت کمزور مگر حاجی زیادہ

پاکستان میں وزارت مذہبی امور کے وفاقی وزیر نورالحق قادری نے کہا ہے کہ ملکی معیشت کمزور ہے مگر دنیا میں دوسرے نمبر پر حاجی یہاں سے جا رہے ہیں۔

اتوار کو اسلام آبادمیں وفاقی وزیر مذہبی امور پیر نورالحق قادری نے معاونین حج سے خطاب میں کہا کہ ”ہماری معیشت کمزور ہے لیکن پھر بھی حج میں ہم دوسرے نمبر پر ہیں جبکہ عمرہ کی ادائگی میں پاکستانی پہلے نمبر پر ہیں۔“

ان کا کہنا تھا کہ حالیہ برس 17 لاکھ سے زیادہ پاکستانی عمرہ ادا کرچکے ہیں۔ ”مشکلات آتی ہیں لیکن اس ملک کو اللہ تعالی نے امت کی سربراہی کیلئے انتخاب کیا ہے۔“

وفاقی وزیر نے کہا کہ حاجی جب گھر چھوڑتا ہے تو اس میں بہت غصہ میں ہوتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ حاجی ہر وقت جھگڑے پہ تلا ہوتا ہے آپ لوگ بڑے طریقے سے حاجیوں کو ہینڈل کرنا ہے۔ بڑے تحمل سے حاجیوں کے غصہ کو برداشت کرنا ہوگا۔

نورالحق قادری کا کہنا تھا کہ اس سال کا حج شدید گرمی میں ہے جس میں حجاج بھی گرم ہوں گے۔ ”ہماری پوری وزارت کی عزت آپ کے ہاتھ میں ہوگی۔“

وفاقی وزیر اور حاجیوں کی فائل فوٹو

وفاقی وزیر نے کہا کہ جو لوگ حجاج کو سہولیات فراہم کرتے ہیں ان کو تمام عبادات سے بڑھ کر ثواب ملے گا۔ ”حرمین شریفین کا ادب و احترام کا تقاضا کرتا ہے۔ میرا ذہن ہروقت حج کے گرد گھومتا رہتا ہے۔“

وفاقی وزیر نے کہا کہ اس بار حج معاونین بھیجنے کے لیے ان کے پاس بڑی سفارشات آئیں۔

خیال رہے کہ پاکستان کی حکومت سرکاری ملازمین اور عام افراد کو وزارت کے خرچ پر حاجیوں کو سہولیات فراہمی کے لیے بھیجتی ہے۔ ان افراد کو خدام الحجاج کہا جاتا ہے۔

متعلقہ مضامین