ڈینگی پر قابو نہ پایا جا سکا

پاکستان کے صوبہ پنجاب میں ڈینگی مچھر سے پھیلنے والی بیماری اور ہلاکتوں پر قابو نہ پایا جا سکا۔ صرف راولپنڈی شہر میں گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 171 افراد کے خون کے نمونوں میں ڈینگی وائرس کی تصدیق کی گئی ہے جبکہ مرض سے مرنے والوں کی تعداد 39 ہو گئی ہے۔

صحافی یاسر حکیم کے مطابق محکمہ صحت کے ضلعی حکام نے تصدیق کی ہے کہ ڈینگی سے متاثرہ مجموعی مریضوں کی تعداد 7425ہو گئی ہے۔

ڈینگی بخار کے باعث بے نظیر بھٹو اسپتال میں فوزیہ نامی خاتون دم توڑ گئی۔ مرنے والی خاتون کرسچن کالونی کی رہائشی تھی جن کو دو دن قبل ڈینگی وارڈ میں داخل کیا گیا تھا۔ اس طرح ضلع میں ڈینگی سے مرنے والوں کی مجموعی تعداد 39 ہو گئی۔

پوٹھوہار ٹاون کے علاقوں میں ڈینگی کی شدت برقرار رہنے کے باعث مزید 74 افراد بخار کا شکار ہوئے، راولپندی سٹی سے 40 جبکہ چھاؤنی کے علاقوں میں مزید 27 مریض بھی بخار کی وجہ سے ہسپتالوں میں لائے گئے۔

ضلعی انتظامیہ نے ڈینگی سپروائزرسٹاف کو حاضری یقینی بنانے اور سرویلنس دوران انکار پر فوری پولیس کی مدد حاصل کرنے کی ہدایت کی ہے۔

متعلقہ مضامین