سیاسی قیادت پر حملوں کا خطرہ ہے

اسلام آباد پولیس کے سربراہ نے بتایا ہے کہ پولیس کو 68 تھریٹ الرٹ موصول ہوئے ہیں اور معلوم ہوا ہے کہ سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی اور تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان پر بھی حملوں کا خطرہ ہے ۔

پولیس سربراہ نے یہ بات سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے داخلہ کے اجلاس میں بریفنگ دیتے ہوئے کہی ۔  ان کا کہنا تھا کہ پولیس کو 68 تھریٹ الرٹ موصول ہوئے ہیں، یہ تمام خدشات مختلف سیاسی جماعتوں کے رہنماؤں اور کارکنان کے حوالے سے ہیں، نیشنل کاؤنٹر ٹیررازم اتھارٹی نیکٹا نے بڑے سیاسی رہنماؤں کے حوالے سے خدشات کا اظہار کیا ہے اور ان میں تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان اور سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے نام شامل ہیں ۔

اجلاس میں نیشنل کاؤنٹر ٹیررازم اتھارٹی نیکٹا کے سربراہ ڈاکٹرسلیمان کا کہنا تھا کہ 65 افراد پر حملوں کی رپورٹ ہے اور ملک کی تمام سیاسی جماعتوں کی قیادت کو خطرہ ہے۔ جماعت الاحرار اور داعش سے بھی خطرات ہیں تاہم کالعدم تحریک طالبان پاکستان کی جانب سے سب سے زیادہ تھریٹ الرٹ ہیں، ٹی ٹی پی کا نیا سربراہ زیادہ خطرناک ہےاور طالبان کے تمام گروپ اکٹھے ہو رہے ہیں ۔

متعلقہ مضامین