یوٹرن اور سوشل میڈیا

وزیراعظم عمران خان کے یوٹرن کے بیان کے بعد سوشل میڈیا پر ایک طرف ناقدین کے ہاتھ شغل آیا ہے تو دوسری جانب تحریک انصاف کے رہنماؤں اور کارکنوں نے یوٹرن کے فوائد گنوانا شروع کر دیے ہیں ۔

سینٹر فیصل جاوید نے ٹویٹ کی ہے کہ یو ٹرن کے بے شمار فائدے ہیں ۔ انہوں نے انگریزی میں ایک فہرست پیش کر کے یوٹرن کی نئی تعریف اور تشریح کرنے کی کوشش کی ہے ۔

ناقدین نے مختلف میمیز بنا کر عمران خان کے بیان کا خوب مذاق اڑایا ہے ۔ سڑک کےسائن بورڈز والی ایک تصویر میں یوٹرن کے نشان کے ساتھ لیڈر لکھا ہوا ہے جبکہ سیدھے جانے کے نشانات کے ساتھ نپولین اور ہٹلر کے نام لکھ کر خان کے بیان کو طنز کا نشانہ بنایا گیا ہے ۔

ایک اور وائرل ٹویٹ اور فیس بک پوسٹ کے مطابق

کل میں سیدھا جا رہا تھا مگر جیسے ہی جی پی او چوک سے یوٹرن لیا لوگوں نے لیڈر سمجھتے ہوئے کندھوں پر اٹھا کر نعرے لگانے شروع کر دیئے ۔

سوشل میڈیا پر ہزاروں کی تعداد میں صارفین نے اپنے اپنے انداز میں خان کے بیان کو ہدف تنقید بنایا ہے ۔

صحافی مطیع اللہ جان نے ٹویٹ کیا ہے کہ

اسلام میں مرد کو چار یوٹرن لینے کی اجازت ہے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے