پاکستان کی دوسری جیت

پاکستان نے جنوبی افریقا کو چوتھے ایک روزہ کرکٹ میچ میں آٹھ وکٹوں سے شکست دے کر سیریز دو دو سے برابر کر دی ہے ۔ سیریز کا پانچواں میچ اب دلچسپ اور فیصلہ کن ہوگا ۔

جوہانسبرگ میں کھیلے جا رہے چوتھے ایک روزہ میچ میں پاکستان نے جنوبی افریقا کی جانب سے دیا گیا ۱۶۵ رنز کا ہدف دو وکٹوں کے نقصان پر ۳۲ ویں اوور میں حاصل کر لیا ۔

اوپنر امام الحق اِس وقت ۷۱ رنز بنا کر جیت سے ایک رنز پہلے آوٹ ہو گئے ۔ بابر اعظم نے ۴۱ رنز بنائے ۔ اِس سے قبل پاکستانی اوپنر فخر زمان 44 رنز بنا کر جنوبی افریقی بالر عمران طاہر کی گیند پر کیچ آؤٹ ہو گئے تھے۔

آج میزبان ٹیم کی جانب سے اننگز کا آغاز کوئنٹن ڈی کاک اور ہاشم آملہ نے کیا تھا۔

پاکستان کو پہلی کامیابی اس وقت ملی جب شاہین آفریدی نے کوئنٹن ڈی کاک کو ایل بی ڈبلیو کر دیا۔ جنوبی افریقہ نے فیلڈ امپائر کے فیصلے کے خلاف ریویو لیا تاہم تھرڈ امپائر نے فیلڈ امپائر کا فیصلہ برقرار رکھا۔

میزبان ٹیم ابھی پہلے نقصان سے پوری طرح سنھبل نہ پائی تھی کہ 18 رنز کے مجموعی سکور پر ریزا ہینڈرک شاہین آفریدی کی ہی گیند پر دو رنز بنا کر کیچ آؤٹ ہو گئے۔

پاکستان نے جنوبی افریقہ کے کپتان فاف ڈوپلیسی کے خلاف رویو لیا تاہم تھرڈ امپائر نے فلیڈ امپائر کے ناٹ آؤٹ کا فیصلہ برقرار رکھا۔

دو وکٹیں گرنے کے بعد فاف ڈوپلیسی اور ہاشم آملہ نے ذمہ دارانہ بیٹنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے تیسری وکٹ کے لیے 101 رنز کی اہم شراکت قائم کی۔

119 رنز کے مجموعی سکور پر شاداب خان نے فاف ڈوپلیسی کو آؤٹ کر کے اپنی ٹیم کو اہم کامیابی دلائی۔ جنوبی افریقہ کے کپتان نے پانچ چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے 57 رنز بنائے۔

میزبان ٹیم کے آؤٹ ہونے والے چوتھے بلے باز ہاشم آملہ تھے جو عماد وسیم کی گیند پر بولڈ ہو گئے۔ انھوں نے سات چوکوں کی مدد سے 59 رنز بنائے۔

جنوبی افریقہ کی پانچویں وکٹ اس وقت گری جب ڈیوڈ ملر چار رنز بنا کر محمد عامر کی گیند پر ایل بی ڈبلیو ہوئے۔

ڈیوڈ ملر نے فیلڈ امپائر کے فیصلے کے خلاف ریوو لیا تاہم تھرڑ امپائر نے فیلڈ امپائر کا فیصلہ برقرار رکھا۔

پاکستان کی جانب سے عثمان شنواری نے عمدہ بولنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے ایک اوور میں تین کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔ جنوبی افریقہ کی جانب سے کگیسو رابادا، ڈیل سٹین اور وین دیر ڈیسن یکے بعد دیگرے آؤٹ ہوئے۔

اس میچ میں پاکستان نے ٹاس جیت کر پہلے فیلڈنگ کا فیصلہ کیا تھا ۔

دونوں ٹیموں کے درمیان سیریز کا تیسرا میچ بارش کی وجہ سے مکمل نہ ہوسکا تھا جس میں ڈک ورتھ لوئیس میتھڈ کے تحت جنوبی افریقہ 13 رنز سے میچ جیت کر سیریز میں سبقت حاصل کرنے میں کامیاب ہو گیا تھا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button