کشمیر کی آزادی کے لیے سیاہ پٹی

پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے مقبوضہ جموں و کشمیر کے کشمیریوں سے اظہار یک جہتی کے لیے بازو پر کالی پٹی باندھی ہے۔

وزیراعظم ہاؤس سے جاری بیان اور تصویر میں بتایا گیا ہے کہ مظلوم کشمیریوں سے اظہار یک جہتی کے لیے وزیرِ اعظم آفس میں دن تین بجے سائرن بجایا گیا اور پانچ منٹ کے لئے خاموشی اختیار کی گئی۔

ادھر ایوان صدر سے جاری ویڈیو اور بیان میں کہا گیا ہے کہ صدرمملکت ڈاکٹر عارف علوی سے چیئرمین سینٹ صادق سنجرانی کی ملاقات کی جس میں صدر مملکت اور چیئرمین سینٹ نے کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لئے ایک دوسرے کو IAMKASHMIR# والی سیاہ پٹی پہنائی۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ وزیراعظم سیکریٹریٹ اور ملک کے دیگر حصوں کی طرح سائرن بجنے کے ساتھ ہی افسران و سٹاف نے کھڑے ہوکر کشمیری بھائیوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کا مظاہرہ کیا۔

ایونٹ کے اختتام پر قومی ترانہ بجایا گیا۔

اس سے قبل وزیراعظم نے اپنے ٹویٹ میں لکھا تھا کہ ’مودی سرکار نے 75 دن سے مقبوضہ کشمیر کا محاصرہ کررکھا ہے۔ مودی سمجتھا ہے کہ وہ 9 لاکھ فوجیوں کواستعمال کرکے اپنا ایجنڈا پورا کرلے گا۔‘

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ دنیا مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی بدترین صورتحال دیکھ رہی ہے اور مودی حکومت اب خوفزدہ ہے۔

متعلقہ مضامین